EID Poetry

EID Poetry

EID Poetry
EID Poetry

Eid Poetry Is Says Poetry That We Read And Wrote On The Occasion Of Eid Like Eid Cards Whose Sending For Someone Or Send Sms via Mobile Eid Poetry That We Share Our Friends.Nowadays Lots Of People Share Eid Poetry On Social Media Sites Like Facebook,Twitter,Instagram And Many More That,S Called Eid Poetry

EID Poetry Hindi/Urdu/English

suna hai chand niklega

EID Poetry Hindi/Urdu/English
EID Poetry Hindi/Urdu/English

suna hai chand niklega
suna hai eid bhi hogi

Apne dil ka haal tumhein sunaoon kese

Apne dil ka haal tumhein sunaoon kese
tu jo sath nahi mein eid manaoon kese

Us Se Milna Tu Usay Eid Mubarak Kehna

Us Se Milna Tu Usay Eid Mubarak Kehna
Ye Bhi Kehna Ke Meri Eid Mubarak Kar De

Kuch Taare Teri Palkon Pe Bhi Roshan Hun Gey

Kuch Taare Teri Palkon Pe Bhi Roshan Hun Gey
Kuch Rulaye Ga Muje Bhi Tera Gham Eid Ke Din

Tujh Ko Meri Na Muhe Teri Khabar Jaye Gi

EID Poetry Hindi/Urdu/English
EID Poetry Hindi/Urdu/English

Tujh Ko Meri Na Muhe Teri Khabar Jaye Gi
Eid Ab Ke Bhi Dabe Paon Guzar Jaye Gi

Eid Ayi Hai Musarat K Pyami Ban Kar

Eid Ayi Hai Musarat K Pyami Ban Kar
Wo Musarat Jo Teri Deed Se Wabasta Hai

Udhar Se Chand Tum Dekho, Idhar Se Chand Ham Dekhen

Udhar Se Chand Tum Dekho, Idhar Se Chand Ham Dekhen
Nigahen Yun Takrayen Ke Do Dilon Ki Eid Ho Jaye

Gham Hi Gham Hain Teri Umeed Mein Kya Rakha Hai

Gham Hi Gham Hain Teri Umeed Mein Kya Rakha Hai
Eid Aya Karay Ab Eid Mein Kya Rakha Hai

Eid Ka Din Hai Aaj Tu Gale Mil Lay Nasir

EID Poetry Hindi/Urdu/English
EID Poetry Hindi/Urdu/English

Eid Ka Din Hai Aaj Tu Gale Mil Lay Nasir
Rasm-e Duniya Bi Hai Moqa Bi Hai Dastoor Bi Hai

Rothay Haon Ko Mna Loo Phir Eid Aa Gayi Hai

Rothay Haon Ko Mna Loo Phir Eid Aa Gayi Hai
Armaan Naye Saja Lo Phir Eid Aa Gayi Hai

Us Ki Mehki Hoi Yaadon Ki Sada Jag Uthi

Us Ki Mehki Hoi Yaadon Ki Sada Jag Uthi
Door Ufaq Par Jo Nazar Aya Kabi Eid Ka Chand

Is Eid Par Phir Sath Hain Mere

Is Eid Par Phir Sath Hain Mere
Pardais Tanhai Or Bas Teri Yaadain

Khud Tu Aya Nahi Aur Eid Chali Ayi Hai

EID Poetry Hindi/Urdu/English
EID Poetry Hindi/Urdu/English

Khud Tu Aya Nahi Aur Eid Chali Ayi Hai
Eid Ke Roz Mujhe Yun Na Sataye Koi

chand eid ka dilkash ha manta hoon

chand eid ka dilkash ha manta hoon
Husn e jana se magar haar jaye gaa

talkhiyaan chubhne lagein jab zest ke pemaane mein

talkhiyaan chubhne lagein jab zest ke pemaane mein
Dard ke maroon ne ghool ke piya Eid ka chaand

Tujh ko meri na mujhe teri khabar jaegi

Tujh ko meri na mujhe teri khabar jaegi
eid ab ki bhi dabbe paaon jaegi

chand hi ko dekh kar agar aati hai eid toh

EID Poetry Hindi/Urdu/English
EID Poetry Hindi/Urdu/English

chand hi ko dekh kar agar aati hai eid toh
toh yaqeen maano mein har roz eid karta hoon

kesi eidein

kesi eidein ………………….kahaan ki eidein
gallay jis din yaar lag jayega ussi din eid karlenge

dekha eid ka chand to mangi yeh dua rab se

dekha eid ka chand to mangi yeh dua rab se
de de tera sath eid ka tohfa samajh kar…

iss eid par bh saath mere

iss eid par bh saath mere
pardais tanhai Aur bass teri yadein

Shayad tum aao issi intezaar

EID Poetry Hindi/Urdu/English
EID Poetry Hindi/Urdu/English

Shayad tum aao issi intezaar
ab k baras ki bhi eid guzari

khud toh aaya nahi Aur Eid Challi aai hai

khud toh aaya nahi Aur Eid Challi aai hai
Eid ke rooz mujhe Yoon na sataaye koi….

Gham hi Gham hain teri umeed mein kia rakha hai

Gham hi Gham hain teri umeed mein kia rakha hai
eid aaya kare ab eid mein kia rakha ha

uss se eid milna toh usse eid mubarak kehna

EID Poetry Hindi/Urdu/English
EID Poetry Hindi/Urdu/English

uss se eid milna toh usse eid mubarak kehna
yeh bhi kehna mujhe eid mubarak keh de

mein toh uss roz manaonga eid

mein toh uss roz manaonga eid
khatam jis roz yeh judai hogi

hum na maane ge eid aai hai

EID Poetry Hindi/Urdu/English
EID Poetry Hindi/Urdu/English

hum na maane ge eid aai hai
aap aate toh eid bhi aati

______________

Eid Poetms In Urdu

بادباں ناز سے لہرا کے چلی باد مراد

بادباں ناز سے لہرا کے چلی باد مراد
کارواں عید منا قافلہ سالار آیا

حاصل اس مہ لقا کی دید نہیں

حاصل اس مہ لقا کی دید نہیں
عید ہے اور ہم کو عید نہیں

خوش ہو گیا یہ دل نا امید آج

خوش ہو گیا یہ دل نا امید آج
خبر ہو گئی کہ عید ہے آج

اگر حیات ہے دیکھیں گے ایک دن دیدار

اگر حیات ہے دیکھیں گے ایک دن دیدار
کہ ماہ عید بھی آخر ہے ان مہینوں میں

اے ہوا تو ہی اسے عید مبارک کہیو

اے ہوا تو ہی اسے عید مبارک کہیو
اور کہیو کہ کوئی یاد کیا کرتا ہے

اپنی خوشیاں بھول جا سب کا درد خرید

اپنی خوشیاں بھول جا سب کا درد خرید
سیفیؔ تب جا کر کہیں تیری ہوگی عید

میرے دیدار سے منسلک اُنکی عید ہے شاکرہ

میرے دیدار سے منسلک اُنکی عید ہے شاکرہ
گر نقاب اُلٹ دوں تو اُنہیں عیدی مل جائے

آئی عید و دل میں نہیں کچھ ہوائے عید

آئی عید و دل میں نہیں کچھ ہوائے عید
اے کاش میرے پاس تو آتا بجائے عید

وصل خواہش، ہجر حاصل اُداس موسم درد کامل

وصل خواہش، ہجر حاصل اُداس موسم درد کامل
عید کیا ہے شبرات کیا ہے، دن کیا ہے رات کیا ہے؟؟

دل اداس ہے جاناں، نظر میں پیاس ہے جاناں

دل اداس ہے جاناں، نظر میں پیاس ہے جاناں
خدارا صورت دکھا دو __ ہم بھی عید منالیں

سبحان تیری قدرت ، کہ کیا سکون مل رہا ہے

سبحان تیری قدرت ، کہ کیا سکون مل رہا ہے
گلے لگ کے عید مجھ سے، میرا خون مل رہا ہے

__________________

Eid Poems in Urdu

نہ جانے اس برس یہ عید کیسے ہم گزاریں گے

نہ جانے اس برس یہ عید کیسے ہم گزاریں گے
یہ آنسو کتنے دل پہ کتنے پلکوں سے اتاریں گے

ہمیں گلے ملے گا کوئی تیری یاد آئے گی
تمہاری یاد میں دل کی یہ دنیا ہم سنواریں گے

تمہارے ساتھ گزرے وقت کی یادوں میں کھو کر ہم
تری یادوں کی خوشبو سے اسے ہم اور نکھاریں گے

نہ جانے اس برس یہ عید کیسے ہم گزاریں گے
یہ آنسو کتنے دل پہ کتنے پلکوں سے اتاریں گے

عید سے پہلے میری عید گُزر گئی

عید سے پہلے میری عید گُزر گئی
را ت خواب میں آنکھوں سے تیری تصویر گُزر گئی

نقاب میں چُھپا گلاب کچھ کہہ گیا مجھے
سانسیں ہوگئیں فَنا دل پہ ازیت گُزر گئی

سِگرٹ کی آڑ لے کر خود کو بہلانے لگا میں
اُٹھا جو دُھواں کمرے میں میری آہ نکل گئی

لب و رُخسار پہ راہ گئی خوشیاں ادوری میرے
ہوا یوں کہ آنکھوں سے آنسوں کی تسبی نکل گئی

اے مُرشد چُھوڑا قید میری یہ عشق کی دلدل سے
خُدا گوا ہے ساری زندگی اپنی تلخیوں میں گُزر گئی

خاموش لَبوں پہ تیری ذات کی تسبی چلی مُسلسل
زندگی تماشا ہے کبھی نفیس کبھی بے نفیس گُزر گئی

کوئی اتنا چاہے ہمیں تَو بتانا

کوئی اتنا چاہے ہمیں تَو بتانا
کوئی تمہاری فکر کرے تَو بتانا

عید مُبارک تَو ہر کوئی کہہ دیتا ہے
کوئی ہمارے انداز میں کہے تَو بتانا

گوری کرت سنگھار

گوری کرت سنگھار
آج ہے عید کا تہوار
سجو ری گوری
سنوروں ری گوری
تو ہے بڑی دھنوان
حاصل ہے تجھے
تیرے میت کا پیار

یہ عید بھی گزر جائے گی تیرے بغیر

یہ عید بھی گزر جائے گی تیرے بغیر
چلتا رہے گا میری زندگی کا سفر تیرے بغیر
لوگ عید کی خوشیاں منائیں گے اور میں روتا رہوں گا تیرے بغیر
میں تو ڈھوبا ہوں تیرے عشق میں کیا تُو بھی اُداس ہے میرے بغیر
مت تڑپا مجھے راہے عشق میں فہیم
ایک بار آکر دیکھ کتنا تنہاہ ہوں میں تیرے بغیر

عید لوٹ آئی تری یاد لیے

عید لوٹ آئی تری یاد لیے
تحفے میں درد کی سوغات لیے
آنکھوں میں اشک کی برسات لیے
ایک اک لمحے میں سو سال لیے
عید لوٹ آئی تری یاد لیے

میرا سنگھار بھی تم

میرا سنگھار بھی تم
میرا انتظار بھی تم
میرا چین بھی تم
میرا قرار بھی تم
میری سوچ بھی تم
میرا اسرار بھی تم
میری عید بھی تم
میرا تہوار بھی تم
تمہاری دید
میری عید

آ جاؤ نہ کہ چاند رات ہے

آ جاؤ نہ کہ چاند رات ہے
آجاؤ نہ کہ دل بہل جائے

آجاؤ نہ کہ ہم کو بھی
اس چاند رات کا سکھ مل جائے

یہ عید جو تیرے بغیر گزری ہے

یہ عید جو تیرے بغیر گزری ہے
یہ عید بہت سوگوار گزری ہے

آج کوئی دل میں آ بسا ہے
دل سے آج کسی کی ذات اتری ہے

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *